کپتان کا ایک ہی تاریخی کام جوپورے ملک میں ایک تعلیمی نظام ۔یہ ہے نیا پاکستان

اسلام آباد(کا نئات نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ مارچ 2021تک پورے ملک میں یکساں تعلیمی نظام نافذ ہو جائے گا۔۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کے حوالے سے اگردنیا میں کسی ملک کے فیصلوں میں کنفیوژن نہیں تھی تووہ پاکستان تھا،ہمارے فیصلوں میں کہیں کوئی تضاد نہیں آیا۔ قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا

کہ ہمارے پاس دہری مشکل ہے، ہم نے ایک طرف کورونا اور دوسری طرف بھوک سے بچنا ہے، پاکستان میں کچی آبادیاں، بڑی آبادیاں اور غریب افراد ہیں، نیوزی لینڈ کی مثال نہیں دی جاسکتی کیونکہ وہاں آبادی پھیلی ہوئی ہے۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن سے متعلق مجھ پر بہت زیادہ دباؤ تھا، خود میری کابینہ کا پریشر تھا،آپ اگر سنگاپورکی طرح ہوتے تو پھر بہترین چیز کرفیو تھی مگر پاکستان کی صورتحال مختلف تھی، ہر ملک اپنے اپنے حساب سے فیصلے کر رہا تھا، اگر دنیا میں کسی ملک کے فیصلوں میں کنفیوژن نہیں تھی تو وہ پاکستان تھا۔

کیا وزیر اعظم عمران خان کی تنخواہ 2 سے بڑھا کر 8 لاکھ کردی گئی؟سچائی سامنے آگئی

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!