ستمبر کے تیسرے ہفتے بھی مہنگائی کنٹرول نہ ہو سکی ٹماٹر ، مرغی ،آٹے،چینی کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں۔ جانیں اس خبر میں

کائنات نیوز! ستمبر کا تیسرا ہفتہ،مہنگائی کنٹرول نہ ہو سکی،ٹماٹر ،برائلر مرغی ،گندم کا آٹا،چینی مہنگی ہو گئی،پیاز،لہسن،چائے کی پتی ،گرم صالحہ جات ،تازہ دودھ کی قیمتیں بھی بڑھ گئی ۔ادارہ شماریات کی جانب سے مہنگائی کے ہفتہ وار اعدادو شمار جاری کر دیئے گئے۔ جس کے مطابق ایک ہفتے کے دوران مہنگائی کی شرح میں 0 اعشاریہ 71 فیصد اضافہ ہوا

،مہنگائی کی مجموعی شرح 8 اعشاریہ 71 فیصد کی سطح پر پہنچ گئی،17ہزار تک ماہانہ کمانے والوں کیلئے مہنگائی کی شرح 11 اعشاریہ 67فیصد ریکارڈ کیا گیا ،17 سے 23 ہزار تک والوں کیلئے مہنگائی کی شرح 11 اعشاریہ 37فیصد تک پہنچ گئی،دستاویز کے مطابق رواں ہفتے کے دوران 26 اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈکیا گیا ، ستاویز کے مطابق رواں ہفتے کے دوران ٹماٹر کی فی کلو قیمت میں 28 فیصد اضافہ ہوا،ایک ہفتے کے دوران ٹماٹر کی 20 روپے فی کلو مہنگا ہوا ،ٹماٹر کی فی کلو قیمت 71 روپے سے بڑھ کر 91 روپے کی سطح پر پہنچ گئی۔ دستاویز کے مطابق رواں ہفتے انڈوں کی فی درجن قیمت میں 7 روپے کا اضافہ ہوا،برائلر مرغی کی فی کلو قیمت میں ساڈھے8 روپے کا اضافہ ہوا ، دستاویز کے مطابق ایک ہفتے کے دوران دال ماش اور دال مونگ 2 روپے فی کلو تک مہنگی ہو گئی۔ رواں ہفتے کے دوران چینی کی فی کلو قیمت میں ایک بار اضافہ ریکارڈ کیا گیا ۔ دستاویز کے مطابق چینی کی فی کلو 94روپے 72 پیسے کی سطح پر پہنچ گئی۔دستاویز کے مطابق رواں ہفتے کے دوران تازہ دودھ،دہی،خشک دودھ،جلانے کی لکڑی بھی مہنگی ہوئی،ایک ہفتے کے دوران لہسن، گڑ ،کوکنگ آئل کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوا۔دستاویز کے مطابق رواں ہفتے کے دوران صرف 3 اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں معمولی کمی ہوئی ،دستاویز کے مطابق ایل پی جی کا گھریلو سیلنڈر

،آلو اور کیلے فی درجن معمولی سستے ہوئے،ستمبر کے تیسرے ہفتے کے دوران چاول،نمک،بریڈ سمیت 26 اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

مفتی منیب الرحمن کا دو ٹوک اعلان ،توہین رسالتؐ،توہین صحابہؓ اور توہین اہل بیت ؓکسی صورت میں برداشت نہیں کرسکتے

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!