آئین کی بات کرنا، عوامی مسائل کو اجاگر کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہوگی مسلم لیگ ن کے رہنماؤں کے خلاف

کائنات نیوز! سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مسلم لیگ ن کے رہنماؤں کے خلاف مجرمانہ سازش کا مقدمہ درج کیے جانے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ آئین کی بات کرنا، عوامی مسائل کو اجاگر کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہوگی۔اسلام آباد میں پارٹی رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ لاہور کے تھانہ شاہدرہ میں آج ایک شہری بدر رشید نے ملک کے سابق وزرائے اعظم

، سابق وفاقی وزراءاور سابق گورنر کے خلاف غداری کا مقدمہ درج کرایا۔انہوں نے کہا کہ اگر وفاقی وزراء میں ہمت ہے تو بدر بشیر کا سہارا نہ لیں، خود سامنے آئیں، وزیر داخلہ اپنے نام سے مقدمہ درج کرائے، مسلم لیگ ن ان مقدمات کا سامنا کرے گی۔ان کا کہنا تھا شاید عوامی مسائل ختم ہو گئے اس لیے وفاقی وزراء چار پانچ روز سے پریس کانفرنسز کر رہے ہیں۔شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ اگر آئین کی بات کرنا، عوامی مسائل کو اجاگر کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہو گی، اگر اپنے حق کے لیے بات کرنا بغاوت ہے تو ہر روز یہ بغاوت ہو گی، اگر حکومت کو گھر بھیجنے کی بات کرنا غداری ہے تو ہر روز یہ بغاوت ہو گی۔انہوں نے مزید کہا کہ اگر سی پیک کی بندش کی بات کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہو گی، اگر ملک کے خلاف سازش کو بے نقاب کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہو گی، اگر کشمیر کے سودے پر بات کرنا بغاوت ہے تو ہر روز بغاوت ہو گی۔ن لیگ کے نائب صدر کا کہنا تھا کہ حکومت کارکردگی سے بات کرتی ہے، گالیوں سے بات نہیں کرتی، وفاقی ورزاء سے کہتا ہوں کہ سیاسی میدان میں مقابلہ کرنا ہے تو آؤ، یہ ہتھکنڈے اب نہیں چلیں گے، ہتھکڑی لگانی ہے تو لگا لو، ہمت ہے تو لگاؤ، مسلم لیگ ن حاضر ہے، مقدمہ عوام کے سامنے چلاؤ۔ان کا کہنا تھا کہ آج حکومت کو اپنی کارکردگی دکھانےکا وقت تھا، بتاتے کہ ملک کے لیے کیا کیا، لیکن کیا کسی وزیر نے آٹے، چینی، منہگائی، کرپشن، بے روزگاری کی بات کی۔

مسلم لیگ ن کے سیکرٹری جنرل احسن اقبال کا کہنا تھا کہ ہر وہ شخص جو پاکستان کے آئین سے رو گردانی کرے گا ہم اس کے خلاف جنگ کریں گے کیونکہ پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ کا مقصد ہی پاکستان میں آئین اور جمہوریت کی بحالی ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں