ڈرائیونگ لائسنس کے لیے اب سفارش کام نہیں آئے گی ،نیاسسٹم متعارف

کائنات نیوز! ڈرائیونگ لائسنس کے لیے اب سفارش کام نہیں آئے گی، لاہور پولیس نے ٹریفک قوانین اور اشاروں کے ٹیسٹ کو کمپیوٹرائزڈ کر کے نیا سسٹم آن لائن روڈ سائن ٹیسٹ متعارف کرا دیا، آئی جی پنجاب نے پورے صوبے میں سسٹم کو شروع کرنے کا حکم دے دیا۔ذرائع کے مطابق سفارشی کلچر کے خاتمے کے لیے ڈرائیونگ ٹیسٹ کمپیوٹرائزڈ کردیا گیا،

لاہور میں ابتدائی طور پر ڈرائیونگ لائسنس کے امیدوار سے ٹریفک اشاروںکے کمپیوٹرائزڈ ٹیسٹ کا سافٹ وئیر شروع کیا جائے گا، ڈی ایچ اے ڈرائیونگ ٹیسٹ سنٹر پر کمپیوٹرائزڈ ٹیسٹ سسٹم شروع کیا جائے گا، جہاں آنے والے ہر شہری کا کیومیٹک سسٹم کے تحت اندراج کیا جائےگا، نئے سسٹم پر تمام کوائف شہری خود فیڈ کرائیں گے جیسے ہی کوائف مکمل ہونگے تو ٹریفک قوانین اور سائنز کا ٹیسٹ کمپیوٹرائزڈ ہوگا، امیدوار کے نام کے ساتھ نتیجہ سامنے آجائے گا۔سی ٹی او لاہور حماد عابد کا کہنا ہے کہ اس سے پہلےصوبہ بھر میں کاغذ پر اشارے بنا کر ٹیسٹ لیا جاتا تھا، کمپیوٹرائزڈ سے لائسنس صرف اہل امیدواروں کو جاری ہونگے، ٹریفک پولیس نے پی آئی ٹی بی کے تعاون سے سافٹ وئیر تیار کیا ہے۔آئی جی پنجاب انعام غنی نے لاہور ٹریفک پولیس کے اقدام کو سراہا ہے اور یکم دسمبر سے پہلے صوبہ بھر میں متعارف کرانے کا حکم دے دیا۔دوسری جانب حکومت نے گونگے بہرے افراد کو ڈرائیونگ لائسنس دینے کا فیصلہ کرلیا، وزیراعلیٰ پنجاب نےوزارت قانون کو قانون سازی کرنے کی ہدایات جاری کردیں،وزارت قانون گونگے بہرے افراد کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کرنے کے لیے ایک ماہ میں تجاویز تیار کرکے کابینہ کو پیش کرے گی۔

 

2 Comments

اپنی رائے کا اظہار کریں