پاکستانیوں کی عید ہو گئی۔ پورے 90کروڑ ڈالر۔ سعودی عرب میں جاری اجلاس سے پاکستان کیلئے بڑی خوشخبری آ گئی

کائنات نیوز! سعودی عرب میں منعقدہ جی 20 ممالک کے اجلاس میں پاکستان سمیت 46 ممالک نے 5.7 ارب ڈالر قرض مؤخر کرنے کی درخواست کر دی جبکہ پاکستان کو جنوری سے جون 2021 تک 90 کروڑ ڈالر کا ریلیف ملنے کا امکان ہے۔اجلاس کے اعلامیہ کے مطابق جی 20 ممالک کا قرضے مؤخر کرنے کے پلان ڈی ایس ایس آئی میں توسیع کا عزم ہے۔

جی 20 ممالک نے کرونا سے متاثرہ ممالککے لیے قرض سے متعلق اضافی مشترکہ فریم ورک بھی تیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔اعلامیہ کے مطابق صحت کے عالمی شعبے میںتحقیق اور ترقی کو فروغ دیا جائے گا۔ تمام ممالک کو کرونا ویکسین کی سستی اور آسانفراہمی کو یقینی بنایا جائے گا۔اعلامیہ میں کہا گیا کہ کرونا سےمتاثرہ عالمی معاشی سرگرمیاں کچھ حد تک بحال ہوئیں تاہم نئی لہر آنے سے مکمل معاشیبحالی تاحال غیر یقینی کا شکار ہے۔ مضبوط اور پائیدار معاشی بحالی کیلئے مل کر کامکیا جائے گا۔کام وزارت خزانہ کے مطابق پاکستانپ ہلے مرحلے میں 80 کروڑ ڈالر کا ریلیف حاصل کر چکا ہے جبکہ اپریل سے دسمبر 2020 کےپہلے مرحلے کے تحت مزید ایک ارب ڈالر ریلیف ملنا باقی ہے۔ پہلے مرحلے میں قرضوں میںمجموعی طور پر ایک ارب 80 کروڑ ڈالر کا ریلیف متوقع تھا۔کام کا کہنا ہے کہ سعودی عرب، امارات،برطانیہ، جاپان اور روس سے مذاکرات اگلے ماہ مکمل ہوں گے۔ پاکستان قرضے مؤخر کرانےکے لیے 16 ممالک کے ساتھ پہلے ہی معاہدے کر چکا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!