سردیوں میں انڈہ کھانا صحت کیلئے کتنا مفید ہےاس سے جسم کوکون کونسے مثبت نتائج حاصل ہوتے ہیں

سردیوں میں انڈہ

کائنات نیوز! انڈے کھانے کا شوق تو ہر کسی کو ہوتا ہے۔ بہت سے لوگوں کا ناشتہ انڈے کے بغیر ادھورا ہوتا ہے اور ٹھیک بھی ہے کیونکہ انڈا کھانے سے بھرپور فوائد حاصل ہوتے ہیں۔ لیکن انڈوں کے حوالے سے زیادہ تر لوگ یہ بھی جاننا چاہتے ہیں کہ روزانہ کتنے انڈے صحت کے لئے فائدہ مند ہیں اور کتنے نقصان دہ ہوسکتے ہیں۔کئی سالوں سے انڈا کھانے کے شوقین افراد کو مشورہ دیا جاتا رہا ہے کہ

وہ دن بھر کی غذا میں انڈوں کی تعداد یا کم ازکم انڈے کی زردی کم کردیں۔ماہرین کہتے ہیں کہ ایک درمیانے سائز کے انڈے میں 186 ملی گرام کولیسٹرول شامل ہوتا ہے جو روزانہ کی تجویز کردہ مقدار کا 62 فیصد بنتی ہے جبکہ اس کے برعکس انڈے کی سفیدی میں زیادہ تر پروٹین اور کم کولیسٹرول پایا جاتا ہے۔اسی حوالے سے ایک حالیہ تحقیق میں کولیسٹرول پر انڈے کے اثرات کا جائزہ لیا گیا ہے، تحقیق میں لوگوں کو دو الگ الگ گروپس میں تقسیم کیا گیا، ایک گروپ کو دن بھر میں ایک سے تین انڈے کھانے کا کہا گیا جبکہ دوسرے گروپ کو انڈے کے علاوہ دوسری غذا کی تجویز دی گئی۔تحقیق کے نتائج سے معلوم ہوا کہ تقریباً تمام حالات میں اچھے کولیسٹرول (HDL) کی تعداد میں اضافہ ہوا۔ دوسری جانب برے کولیسٹرول(LDL) کی سطح میں اضافہ دیکھنے میں نہیں آیا۔اومیگا تھری فیٹی ایسڈ سے بھرپور انڈے خون کے ٹرائی گلیسرائڈ (Triglycerides) کو کم کرتے ہوئے ایک اہم خطرہ ثابت ہوئے۔خون میں کیروٹینائڈ اینٹی آکسیڈینٹس جیسے لوٹین اور زیکزانتھن کی سطح میں اضافہ ہوا جو اس بات کو ظاہر کرتا ہے کہ پورے انڈے کے استعمال کا انحصار فرد پر منحصر ہے۔مطالعاتی تحقیق میں شامل کئے گئے 70 فیصد افراد میں انڈوں کے استعمال سے برے کولیسٹرول (LDL) کی سطح میں کوئی اضافہ نہیں دیکھا گیا جبکہ 30 فیصد لوگوں میں انڈوں کے استعمال سے ہائپر رسپانس ظاہر ہوا۔لہٰذا ماہرین صحت مند انسان کے لئے دن بھر میں 3 انڈوں کا استعمال معاون سمجھتے ہیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!