اگر آپ کو صبح صبح بہت سردی لگتی ہے تو اپنی صبح کا آغاز اس مشروب سے کریں

کائنات نیوز! سردی کے موسم میں گھر کی خواتین کے لیے سب سے بڑا مسئلہ گھر کے بچوں اور حضرات کو صبح صبح گرم بستر چھوڑنے پر مجبور کرنا ہوتا ہے ۔ ہر ایک کی یہی خواہش ہوتی ہے کہ وہ اپنے گرم بستر کو چھوڑ کر نہ ہی نکلے تو بہتر ہے لیکن آج ہم آپ کو ایک ایسے مشروب کے بارے میں بتائيں گے جس کے چند گھونٹ انسان کو اندر سے اتنا گرم کر دیتے ہیں

کہ وہ نہ صرف بستر چھوڑ دیتا ہےبلکہ دن بھر چاک و چوبند رہ کر سردی کا مقابلہ کرنے کی طاقت حاصل کر لیتا ہے-گڑ کا پانی۔گڑ کے اندر یہ خاصیت موجود ہوتی ہے کہ وہ گرم رکھنے میں مدد دیتا ہے ۔اسی وجہ سے سردی کے موسم میں ہر گھر میں گڑ سے بنے ہوئے پکوان تیار کیے جاتے ہیں جو کہ انسان کو گرم ہونے میں مدد دیتا ہے- لیکن آج ہم آپ کو بتائيں گے کہ اپنے دن کا آغاز گڑ کے گرم پانی سے کرنے سے کتنے فوائد حاصل ہو سکتے ہیں-گڑ کا پانی بنانے کا طریقہ ایک گلاس پانی لے لیں اور اس کو ابال لیں ۔ اس کے بعد اس میں ایک انچ گڑ کا ٹکڑا ڈال کر اس وقت تک پکائيں کہ گڑ پانی میں پگھل جائے ۔اس کے بعد اس کو قدرے ٹھنڈا کر لیں اور اس کے بعد اپنی صبح کے آغاز میں اس مشروب کو گھونٹ گھونٹ کر کے پی لیں ۔یہ نہ صرف ذائقے میں بہت مزیدار ہوتا ہے بلکہ اس کے اندر طاقت کا ایک خزانہ پوشیدہ ہوتا ہے جو کہ انسان کو گرم کر کے سردی کا مقابلہ کرنے کی طاقت فراہم کرتا ہے-گڑ کے پانی کے فوائد،کھانسی، نزلہ زکام سے محفوظ رکھے۔گڑ کے اندر وٹامن کی بڑی مقدار موجود ہوتی ہے ۔ گرم پانی کے ساتھ اس کا استعمال گلے کی اندرونی سوزش کو ختم کر کے سانس کی نالیوں کی صفائی کرتا ہے اور نزلہ زکام کے خطرے سے محفوظ رکھتا ہے-قوت مدافعت کو بڑھاتا ہے۔اس کے اندر بڑی مقدار میں کیلوریز موجود ہوتی ہیں جو کہ جسم کو طاقت فراہم کرتی ہیں اور اس کو بیماریوں سے لڑنے کی قوت دیتی ہیں-نظام ہاضم تیز کرتا ہےگڑ معدے میں موجود ہاضمی خامروں کے بننے کے عمل کو تیز کرتا ہے جس کے سبب نظام ہاضم درست ہوتا ہے

قبض سے نجات ملتی ہے اور معدے کو طاقت ملتی ہے-وزن کو کم کرنے میں مفید۔گڑ کا پانی ایک قدرتی مٹھاس کا حامل مشروب ہے ۔ یہ جسم میں موجود جمی ہوئی چکنائی کو پگھلاتا ہے اور وزن کم کرنے والے افراد کے لیے بہت مددگار ثابت ہوتا ہے-یاد رہے ! ذیابطیس کے مریض اس کا استعمال اپنے ڈاکٹر کے مشورے کے بغیر نہ کریں ۔ کیوں کہ اس کو روزانہ پینے سے خون میں شوگر کی مقدار میں اضافہ ہوسکتا ہے جو کہ ان کے لیے خطرناک ثابت ہو سکتا ہے

 

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!