پاکستان کا پڑوسی ممالک سے کورونا کی نئی قسم کی منتقلی روکنے کیلئے بڑا فیصلہ

کائنات نیوز! پاکستان نے کورونا کی نئی قسم کی منتقلی روکنے کیلئے ایران اور افغانستان کیلئے نئی لینڈ بارڈر مینجمنٹ پالیسی نافذ کردی ، نئی لینڈ بارڈر مینجمنٹ پالیسی کا اطلاق پیدل بارڈرکراس کرنیوالوں پر ہو گا۔تفصیلات کے مطابق نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے پڑوسی ممالک سے کورونا کی نئی قسم کی منتقلی روکنے کیلئے بڑا فیصلہ کرتے ہوئے ایران ، افغانستان کیلئے لینڈ بارڈر مینجمنٹ پالیسی میں تبدیلی کردی۔

ان سی او سی کے مطابق لینڈ بارڈرمینجمنٹ پالیسی پرنظر ثانی نئے کورونا کی منتقلی روکنے کیلئے کی ہے، نئی پالیسی کا نفاذ 4 اور 5 مئی کیشب سے ہو گا ، پالیسی 20،19 مئی کی شب تک نافذالعمل رہے گی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے کہا کہ نئی لینڈ بارڈر مینجمنٹ پالیسی کا اطلاق پیدل بارڈرکراس کرنیوالوں پر ہو گا،ا کارگو،باہمی تجارت،افغان ٹرانزٹ ٹریڈپرنئی پالیسی کا اطلاق نہیں ہو گا ، ایران ،افغانستان بارڈرٹریمنلزہفتہ بھرکھلے رہیں گے۔ان سی او سی نے بارڈر پرہیلتھ اسٹاف، قانون نافذ کرنیوالے اداروں کی نفری بڑھانے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ بارڈرپرنفری بڑھانیکامقصدٹیسٹنگ پروٹوکولزپرعملدرآمدیقینی بنانا ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

error: Content is protected !!