”اس جمعرات کو بس کلمہ طیبہ کا یہ عمل کرلیں آپ کی ہر بات وظیفہ کرنے کے بعد پوری ہوجائیگی“

جمعرات کو بس کلمہ طیبہ

کائنات نیوز! آپﷺ کا فرمان عالی شان ہے جو بندہ مجھ پر ایک دفعہ درود پاک پڑھتا ہے اللہ پاک اس پر دس رحمتیں نازل فرماتا ہے ساتھ میں اس کے دس درجات بھی بلند فرما دیتا ہے ۔جمعرات اور جمعہ کی درمیانی رات ایسی فضیلتوں والی رات ہوتی ہے جو بندہ پیارے حبیبﷺ پر رات یا دن میں درود پاکﷺ پڑھتا ہے ۔ اللہ تعالیٰ اس پر رحمتیں نازل فرماتا ہے ۔ آپﷺ خود اسے اپنے مقدس ہاتھوں

سے قبر میں اُتاریں گے ۔ قیامت میں میری شفاعت لوگوں میں سے اس سعادت مند کو ملے گی جس نے اپنے دل سے لاالہ الااللہ کو پڑھا ہوگا ۔اس سے بڑی فضیلت کیا ہوگی ۔ >پیارے آقاﷺ مدینے والے مصطفی نے یہ فرما دیا ہے کہ جو کوئی دل سےلا الہ الااللہ پڑھ لے گا اس کی بخشش ہوجائیگی ۔ جوکہ لوحِ محفوظ پر لکھا ہے عرشِ عظیم پر جب یہ لکھا گیا تو ساتھ میں محمد الرسول اللہ بھی لکھا گیا ۔اپنے دلوں میں رب تعالیٰ کا خوف پیدا کیجئے۔ایک شخص بہت گنہگار تھا جب اس کی موت کا وقت قریب آیا اس نے اپنے بیٹوں کووسیعت کی کہ مرنے کے بعد اسے جلا دینا ہڈیوں کو پیس کر ہوا میں اُڑا دینا اللہ کی قسم اگرمیرے رب نے مجھے پکڑ لیا تو مجھے بہت سخت عذاب دے گا۔ جو پہلے کسی کو بھی نہیں دیا گیا ہوگا۔اس کے بیٹوں نے وسیعت کے مطابق ہی کیا

تو اللہ نے زمین کو حکم دیا اس کا ایک ذرا بھی کہیں ہو تو اس کو جمع کرکے لاؤ زمین حکم بجا لائی تو رب تعالیٰ نے اسے کھڑا کیا اور دریافت کیا تو نے ایسا کیوں کیا ۔ اس نے عرض کی اے اللہ تیرے ڈر کی وجہ سے میں نے ایسا کیا۔ اللہ کریم نے اسے معاف فرما دیا ۔ تو جو کوئی رب تعالیٰ سے ڈرتا ہے اللہ پاک اس کو معا ف فرما دیتا ہے۔پہلا کلمہ طیبہ کی فضیلت بہت بڑی ہے ۔ پہلا کلمہ جوکوئی ایک لاکھ مرتبہ پڑھ لیتا ہے اس کی فضیلت کے بارے میں آیا ہے کہ جوکوئی عزیز واقارب کیلئے ایک لاکھ دفعہ کلمہ طیبہ پڑھ لیتا اور اسکو ایصال ثواب کرلیتا ہے تو ا سکی بخشش کردی جاتی ہے ۔ ایک دفعہ ایک آدمی کسی محفل میں آیا آکر عرض کرتا ہے کہ میں نے اپنی ماں کو عذاب میں دیکھا ہے وہاں پر جو بزرگ بیٹھے تھے انہوں نے کہا جا آج رات تو اپنی ماں

کو اچھی حالت میں دیکھے گارات کو اس نے خواب میں دیکھا کہ اس کی ماں پھولوں کے بستر پر بیٹھی ہے اور ار د گرد حوریں اسے پنکھا جھلا رہی ہیں اگلے دن دوبارہ سے گیا او رجا کر اس بزرگ سے

اپنی رائے کا اظہار کریں